آنکھوں کی بیماریاں

آنکھوں کی بیماریاں انسانی آنکھوں کی خرابیوں یا مشکلات کا مجموعہ ہوتا ہے۔ آنکھوں کی بیماریاں مختلف وجوہات سے پیدا ہوسکتی ہیں اور ان کی علامات، شدت اور علاج مختلف ہو سکتا ہے۔ کچھ عام آنکھوں کی بیماریوں کے نام نیچے دئے گئے ہیں:

نظر کمی (Myopia): آنکھ کے عدسے کی مدد سے دور کی چیزوں کو دیکھنے میں مشکل ہوتی ہے۔

دوربیندگی (Hyperopia): آنکھ کے عدسے کی مدد سے قریب کی چیزوں کو دیکھنے میں مشکل ہوتی ہے۔

آنکھ کا سوزش (Conjunctivitis): آنکھ کے پردے کا سوزشی ہوجانا جس کے باعث آنکھیوں کی سُرخی اور خارش ہوتی ہے۔

آنکھوں کی سُرخی (Red Eye): آنکھ کے سفید حصے کا سُرخ ہوجانا جو عام طور پر انفیکشن، الرجی یا زخم سے ہوتا ہے۔

آنکھ کی پٹی کا فٹنا (Retinal Detachment): آنکھ کی پٹی کے الگ ہوجانے سے نظر کا اچھلنا۔

گلوکوما (Glaucoma): آنکھ کی روشنی کے دباؤ کا اضافہ جو آہستہ آہستہ نظر کو خراب کر سکتا ہے۔

پتہوں کا بڑھ جانا (Cataracts): آنکھ کے پردے کے دھندلے ہوجانے سے نظر کم ہو جاتی ہے۔

سوزشی آنکھوں کا کمر (Keratitis): آنکھ کے کرنیئم کی سوزش جو آنکھ کو دُکانے سے ہوتی ہے۔

یہ صرف چند مثالیں ہیں، اور دیگر بھی آنکھوں کی بیماریاں ممکن ہیں جو مختلف وجوہات سے پیدا ہوسکتی ہیں۔ آپ کو اگر آنکھوں میں کوئی بڑی مشکل محسوس ہو، تو فوراً اپنے نزدیکی طبیب یا آنکھ کے ماہر سے مشورہ کریں۔

آنکھوں کی بیماریاں

آنکھوں سے بیماری کا پتہ چلائیں

آنکھوں سے بیماری کا پتہ چلانے کے لئے آپ کو ذیلی اشارے اور علامات کا خیال رکھنا ہوگا۔ یہاں کچھ عمومی بیماریوں کے علامات دی گئی ہیں جو آنکھوں کی بیماریوں کی وجوہات ہو سکتی ہیں:

آنکھوں میں خارش یا جلن کا احساس۔

آنکھوں سے پانی بہنا یا ریزہ ریزہ آنسوئیں۔

آنکھوں کا سُرخ ہوجانا۔

نظر کمی یا دوربیندگی کا احساس۔

دُھندلی یا دھندلے نظر کا احساس۔

آنکھ میں درد یا تکلیف کا احساس۔

نظر میں تبدیلی، مثلاً کمزور نظر یا دائرہ زنگ نظر کا احساس۔

رات کو نظر کمی یا دوربیندگی کی شدت میں اضافہ ہونا۔

آگر آپ میں سے کسی بھی علامت کا احساس ہو تو بہتر ہوگا کہ آپ فوراً اپنے نزدیکی آنکھ کے ماہر یا طبیب سے رجوع کریں۔ ان کے ذرائع سے مخصوص طبی معائنہ کروایا جائے گا اور آپ کو مناسب تشخیص اور علاج فراہم کیا جائے گا۔

یاد رہے کہ آنکھوں کی بیماریاں اگر جلدی تشخیص اور علاج نہ کی جائیں تو بڑھتے ہوئے مسائل کا شکار ہو سکتی ہیں۔ بہت سی بیماریاں مثلاً گلوکوما اور کتریکٹ وغیرہ جیسی آنکھ کی بیماریاں تیزی سے پیدا ہونے والی ہوتی ہیں جو نظر کو مستقل طور پر خراب کر سکتی ہیں۔ اس لئے اپنی آنکھوں کی خصوصی صحت کا خیال رکھیں اور روزانہ کم از کم ایک مرتبہ آنکھ کے ماہر یا طبیب کا دورہ کریں۔

آنکھوں سے بیماری کا پتہ چلائیں

آنکھوں کی بیماریوں میں سب سے خطرناک بیماری کالا موتیا ہے

جی ہاں، آپ کے کہنے کے مطابق کالا موتیا (Glaucoma) آنکھوں کی بیماریوں میں سب سے خطرناک بیماریوں میں سے ایک ہے۔

کالا موتیا آنکھ کے روشنی کے دباؤ کا اضافہ ہونے کی بنا پر پیدا ہوتی ہے۔ یہ بیماری انسان کی نظر کو تدریجی طور پر خراب کرتی ہے اور اگر علاج نہ کی جائے تو انسان کی نظر مکمل طور پر کم ہو جاتی ہے۔ اس بیماری کی خصوصیت یہ ہے کہ شروعات میں کوئی علامت محسوس نہیں ہوتی، اور جب تک کہ آنکھ کے دباؤ کا اضافہ کافی حد تک نہ پہنچ جائے، شخص کو اس کی خود احساسی صورتحال کا علم نہیں ہوتا۔

آخری مراحل میں، کالا موتیا آنکھوں کے عصبی پٹھوں کو اور آنکھ کی ریٹینا کو متاثر کرتی ہے جو نظر کی بند ہونے کا سبب بنتا ہے۔

کالا موتیا کا علاج عموماً آنکھ کے ماہر ڈاکٹر کے زیر نگرانی کیا جاتا ہے، جو آنکھوں کے دباؤ کے کنٹرول کے لئے دوائیں یا دوسرے طریقے سے علاج کا مشورہ دیتے ہیں۔ اگر آنکھوں کے دباؤ کا اضافہ بہت زیادہ ہو، تو کچھ مواقع پر آپریشن کی بھی ضرورت پیش آتی ہے۔

کالا موتیا کے خطرے کو کم کرنے کے لئے، روزانہ کم از کم ایک مرتبہ آنکھ کے ماہر ڈاکٹر کا دورہ کرنا اہم ہے، خصوصاً اگر آپ کی عمر پانچ سال سے زیادہ ہے یا آپ کے خاندان میں کسی کو کالا موتیا ہے۔ اس طرح سے اگر بیماری کو شروعات میں ہی پہچانا جائے، تو علاج کے ذرائع سے بہتری کی امکانات بہت زیادہ ہوتی ہیں۔

 آنکھوں کی بیماریوں میں سب سے خطرناک بیماری کالا موتیا ہے

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Scroll to Top