haldi doodh benefits in urdu

ہلدی دودھ کے فوائد:

ہلدی دودھ یا “ترکاری”، ایک قدرتی طریقہ ہے جو کہ اندرونی صحت کے لئے اور جلد کی دیکھ بھال کے لئے استعمال کیا جاتا ہے. نیچے چند ممکنہ فوائد دیے گئے ہیں:

جلد کی دیکھ بھال: ہلدی دودھ کا استعمال جلد کی دیکھ بھال کے لئے مفید ہوتا ہے۔ اس میں موجود کرکمین مادہ جلد کے داغ دھبوں کو کم کرنے میں مدد فراہم کرتا ہے.

مضبوطی دینے والا: ہلدی دودھ میں موجود کرکمین جسم کے جوڑوں کی مضبوطی کو بڑھانے میں مدد فراہم کرتا ہے. اس کا روزانہ استعمال جوڑوں کے درد اور آرتھرائٹس کے خلاف مدد فراہم کرتا ہے.

زردی کی کمی کا مقابلہ: ہلدی میں موجود کرکمین خون میں زردی کو کم کرنے میں مدد فراہم کرتا ہے. یہ کمیونٹیز کی خون کی بناؤ میں مدد فراہم کرتا ہے.

ضد زیکٹریا خصوصیت: ہلدی میں موجود ضد زیکٹریا خصوصیت جسم کو مختلف قسم کی بیماریوں سے بچانے میں مدد فراہم کرتی ہے.

گلے کی دیکھ بھال: ہلدی دودھ گلے کی دیکھ بھال کے لئے بھی مفید ہوتا ہے. گرم ہونے کی وجہ سے یہ گلے کی موسمی بیماریوں کی پیشگوئی کرتا ہے.

انفوزیا کے خلاف مدد: ہلدی دودھ انفلوئنزا جیسی موسمی بیماریوں کے خلاف مدد فراہم کرتا ہے۔

وزن کم کرنے میں مدد: ہلدی دودھ کو وزن کم کرنے کے لئے بھی استعمال کیا جاتا ہے. اس میں موجود کرکمین مادہ میٹابولزم کو تیز کرنے میں مدد فراہم کرتا ہے.

زہریلے جانوروں کے کاٹنے کا علاج: ہلدی دودھ کا پیسٹ زہریلے جانوروں کے کاٹنے کے علاج کے طور پر بھی استعمال کیا جاتا ہے۔

یہاں تک کہ ایک طبی ماہرہ ہونے کا ایک طرف، ضروری ہے کہ آپ کسی دوسرے طبی ماہر سے بھی رائے حاصل کریں قبل ازا استعمال کرنے۔ اندرونی صحت یا کسی بھی انفرادی صحت کے مسائل کی صورت میں، آپ کو اپنے ڈاکٹر سے مشورہ کرنا چاہئے کہ کیا ہلدی دودھ کا استعمال کرنا مناسب ہوگا یا نہیں۔

haldi doodh benefits in urdu

haldi doodh peene ke fayde

ہلدی دودھ (ترکاری) پینے کے فوائد:

ہلدی دودھ کا استعمال قدرتی طریقہ سے اندرونی صحت کو بہتر بنانے کے لئے کیا جاتا ہے۔ نیچے دیے گئے فوائد کچھ ہیں:

جلد کی دیکھ بھال: ہلدی دودھ میں موجود کرکمین اینٹی آکسیڈنٹ خصوصیات رکھتا ہے جو جلد کی دیکھ بھال کے لئے مفید ہوتا ہے۔ اس کا استعمال جلد کی چمک، رنگت کی بہتری اور داغ دھبوں کو کم کرنے میں مدد فراہم کرتا ہے۔

آنتوں کی صحت: ہلدی دودھ معدے اور آنتوں کی صحت کو بہتر بنانے میں مدد فراہم کرتا ہے۔

دل کی صحت: ہلدی دودھ میں موجود کرکمین دل کی صحت کو مدد فراہم کرتا ہے، کیونکہ یہ دل کی داغیوں کو کم کرنے میں مدد دیتا ہے اور خون کی روانی کو بہتر کرتا ہے۔

جوڑوں کی مشکلات: ہلدی دودھ کا استعمال جوڑوں کے درد اور آرتھرائٹس کیلئے مفید ثابت ہوتا ہے۔

انسلین کے اثرات کو کم کرنا: ہلدی دودھ میں موجود کرکمین انسلین کی کارکردگی کو بہتر بناتا ہے اور شوگر کے مریضوں کے لئے مفید ثابت ہوتا ہے۔

انفلوئنزا اور سردی کے خلاف مدد: ہلدی دودھ انفلوئنزا اور سردی کی بیماریوں کے خلاف مدد فراہم کرتا ہے کیونکہ اس میں مضاد جراثیم خصوصیات پائی جاتی ہیں۔

چولیسٹرول کم کرنا: ہلدی دودھ کا استعمال کولیسٹرول کو کم کرنے میں مدد فراہم کرتا ہے۔

جسم کی توانائی بڑھانا: ہلدی دودھ میں موجود کرکمین جسم کی توانائی کو بڑھانے میں مدد فراہم کرتا ہے۔

یہاں تک کہ آپ کو اپنی اندرونی صحت کیلئے ہلدی دودھ کا استعمال کرنے سے پہلے اپنے ڈاکٹر سے مشورہ لینا چاہئے۔ اندرونی صحت یا کسی بھی انفرادی صحت کے مسائل کی صورت میں، آپ کو اپنے ڈاکٹر سے مشورہ کرنا چاہئے کہ کیا ہلدی دودھ کا استعمال کرنا مناسب ہوگا یا نہیں۔

haldi doodh peene ke fayde

haldi doodh peene ke fayde nuksan

ہلدی دودھ (ترکاری) پینے کے فوائد:

آنتوں کی صحت: ہلدی دودھ کا استعمال آنتوں کی صحت کو بہتر بناتا ہے اور گیس اور ہاضمہ کے مسائل کو کم کرتا ہے۔

جگر کی صحت: ہلدی دودھ جگر کی صحت کو بہتر کرتا ہے، اس میں موجود کرکمین جگر کے درد کو کم کرنے میں مدد فراہم کرتا ہے اور جگر کی صفائی کو بھی بہتر کرتا ہے۔

دل کی محافظت: ہلدی دودھ دل کی محافظت میں مدد فراہم کرتا ہے، اس کے ضمنی طور پر دل کے امراض کی پیشگوئی کرتا ہے اور خون کی روانی کو بہتر کرتا ہے۔

انسلین کی کارکردگی کو بہتر کرنا: ہلدی دودھ انسلین کی کارکردگی کو بہتر بناتا ہے اور شوگر کے مریضوں کے لئے بھی مفید ثابت ہوتا ہے۔

انفلوئنزا اور سردی کے خلاف مدد: ہلدی دودھ انفلوئنزا اور سردی کی بیماریوں کے خلاف مدد فراہم کرتا ہے اور جسم کی مضبوطی کو بڑھاتا ہے۔

زردی کی کمی: ہلدی دودھ میں موجود کرکمین جسم کی زردی کو کم کرنے میں مدد دیتا ہے۔

گلے کی دیکھ بھال: ہلدی دودھ گلے کی دیکھ بھال کے لئے بھی مفید ہوتا ہے اور زخموں کو تیزی سے بھرنے میں مدد فراہم کرتا ہے۔

ہلدی دودھ (ترکاری) پینے کے نقصانات:

زیادہ مقدار میں استعمال کا نقصان: زیادہ مقدار میں ہلدی دودھ کا استعمال نہ کریں کیونکہ اس کا زیادہ استعمال معدے کی بیماریاں، دست یا پائوں کی پڑیشانی میں اور جلد کے لیے نقصان دے سکتا ہے۔

خون کے تھکن کا اضافہ: زیادہ ہلدی دودھ کا استعمال خون کے تھکن کا اضافہ کر سکتا ہے، جس سے آپ کو خستگی اور کمی محسوس ہوسکتی ہے۔

الرجی: کچھ لوگوں کو ہلدی دودھ یا ہلدی کے اجزاء سے الرجی ہو سکتی ہے، لہٰذا اگر آپ کو الرجی کی علامات محسوس ہوں تو استعمال بند کریں اور ڈاکٹر کی مشورہ لیں۔

جوڑوں کے درد: زیادہ مقدار میں ہلدی دودھ کا استعمال جوڑوں کے درد کو بڑھا سکتا ہے، اس لئے معمولی مقداروں میں استعمال کریں۔

یہاں تک کہ آپ کو اپنی صحت کے لئے ہلدی دودھ کا استعمال کرنے سے پہلے اپنے ڈاکٹر سے مشورہ لینا چاہئے۔ اندرونی صحت یا کسی بھی انفرادی صحت کے مسائل کی صورت میں، آپ کو اپنے

ڈاکٹر سے مشورہ کرنا چاہئے کہ کیا ہلدی دودھ کا استعمال کرنا مناسب ہوگا یا نہیں۔

haldi doodh peene ke fayde nuksan

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Scroll to Top